دوسری جنگِ عظیم کے بعد رواں سال سب سے بڑی کساد بازاری کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے۔ فرانس

پیرس (تیز ترین)  فرانس نے کہا ہے کہ اسے کورونا وائرس کے باعث رواں سال دوسری جنگِ عظیم کے بعد تاریخ کی سب سے بڑی کساد بازاری کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے۔ یہ بات وزیر خزانہ برونو لی میرے نے گزشتہ روز موجودہ حالات کے تناظر میں دئے گئے بیان میں بتائی۔

ان کا کہنا تھا کورونا وائرس کے باعث لاک ڈائون سے معیشت بری طرح متاثر ہورہی ہے، جس کے باعث کساد بازاری کی حالت مشکل صورتحال پیداکرسکتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ 1945 ء میں دوسری جنگ عظیم کے بعد 2009 ء کے مالی بحران میں ملکی اقتصادی شرح نمو منفی 2.2 فیصد رہی تاہم کورونا وائرس کے نتیجے میں رواں سال کساد بازاری کی صورتحال زیادہ خراب ہوسکتی ہے۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.