کرونا وائرس، لاہور ملک کا حساس ترین شہر۔

صوبائی دارالحکومت کے 10 علاقوں کا رابطہ شہر سے منقطع کر دیا گیا

لاہور ( تیز ترین )  کرونا کی وجہ سے لاہور کے 10 علاقے خطرناک قراردئے گئے ہیں، جن کا رابطہ باقی علاقوں سے منقطع کر دیا گیا ہے۔  کرونا کے مجموعی 800 مریضوں کے اندراج کے بعد لاہور پاکستان بھر کا حساس ترین شہر بن گیا۔ تفصیلات کے مطابق ملک میں کرونا وائرس کا پہلا کیس 26 فروری کو رپورٹ ہوا تھا۔ جس کے بعد سے اب تک کل 4900 کیس رپورٹ ہو چکے ہیں۔ جبکہ 77 افراد وفات پا گئے ہیں۔ابتداء میں کرونا  کے سے صوبہ سندھ سب سے زیادہ متاثر ہوا تھا۔ ملک میں کرونا وائرس سے متاثرہ مریضوں میں سے زیادہ تعداد ایران سے واپس آنے والے زائرین کی رہی۔ تاہم بعد ازاں مقامی سطح پر وائرس پھیلنے لگا اور اب صوبہ پنجاب کرونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثر ہونے والا صوبہ بن چکا ہے۔  پنجاب میں کرونا وائرس کے 24 سو سے زائد کیسز رپورٹ ہو چکے ہیں۔

جن علاقوں کا شہر کے دوسرے علاقوں سے رابطہ منقطع کیا گیا ہے، ان میں رائیونڈ، چاہ میراں، سکندریہ کالونی، بیگم کوٹ شاہدرہ، رستم پارک گلشن راوی، سمال انڈسٹری ہاوسنگ کالونی، مغل پورہ ریلوے کالونی، کینٹ، ڈیفنس بی اور بیدیاں روڈ شامل ہیں۔ ان علاقوں میں لوگوں کی نقل و حرکت، داخلے و اخراج پر مکمل پابندی عائد کر دی گئی۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.