صدر ٹرمپ کا چین اور عالمی ادارہ صحت پر کورونا وائرس پھیلانے کا الزام۔

بڑے پیمانے پر ہلاکتوں کی ذمہ داری بھی ڈبلیو ایچ اوپرعائدہوتی ہے۔ پبلک ہیلتھ ایمرجنسی کا بروقت اعلان نہ کرنے سے وباء پھیلی۔ امریکی صدر

واشنگٹن ( تیز ترین ) امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے چین اور عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او ) پر کورونا  وائرس دنیا میں پھیلانے کا الزام عائد کرتے ہوئے امریکا کی جانب سے ہر سال عالمی ادارہ صحت کو دی جانے والی فنڈنگ کو روکنے کا اعلان کیا ہے۔  امریکی صدر کا کہنا ہے کہ ڈبلیو ایچ او سفری پابندیوں کی مخالفت اور چین کے اس بیانیئے کو پھیلاتا رہا ہے کہ وائرس ایک انسان سے دوسرے میں منتقل نہیں ہورہا۔ صدر ٹرمپ نے کہا کہ امریکہ ڈبلیو ایچ او کو سالانہ 40 سے 50 کروڑ ڈالر کی امداد دیتا ہے، لیکن دستاویزات کے مطابق یہ رقم 10 کروڑ ڈالر سے تھوڑی زیادہ ہے۔ امریکی صدر نے ڈبلیو ایچ او سے علیحدگی کے حوالے سے بھی دبے لفظوں میں دھمکی دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے پاس اس کے علاوہ کوئی راستہ نہیں ہو گا جب تک ڈبلیو ایچ او اپنی کارکردگی بہتر نہیں کرتا‘ صدر ٹرمپ  پر الزام عائد کیا جاتا رہا ہے کہ وہ  کورونا  وائرس کے حوالے سے امریکی انٹیلی ایجنسیز کی رپورٹس کو نظر انداز کرتے رہے ہیں اور بروقت کوئی فیصلہ نہیں کر سکے۔جب کہ حقیقت یہ ہے کہ ابتدائی دنوں میں طاقتور ممالک نے حفاظتی اقدامات پر عمل ہی نہیں کیا۔ ٹرمپ نے کہا کہ ڈبلیو ایچ او نے پبلک ہیلتھ ایمرجنسی کا اعلان کرنے میں جو تاخیر کی وہ بہت قیمتی وقت ضائع کرنے کا باعث بنی۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.