شریف برادران کیلئے حرم، طواف اور روضہ رسولﷺ کے سامنے دعائیں مانگیں۔

میں 1992 سے بادشاہوں سے ملاقاتیں کررہا ہوں۔ بے نظیر کی شہادت کے بعد قبرپر جا کردعا کی ،عمران خان تعریف کے لائق ہیں۔ معروف عالم دین مولانا طارق جمیل

اسلام آباد ( تیز ترین )   معروف عالم دین مولانا طارق جمیل نے کہا  ہے کہ میں نے سابق وزیر اعطم نواز شریف اور سابق وزیراعلیٰ شہبا زشریف کیلئے حرم پاک، روضہ رسولِ پاک اورطواف میں دعائیں کیں۔ میں نے نوازشریف کی اہلیہ کی نماز جنازہ پڑھی تو تحریک انصاف کے کارکنوں نے چڑھائی کی۔ ایک انٹرویو میں ان کا کہنا تھا کہ  1992 سے بادشاہوں سے ملاقاتیں کررہا ہوں۔ میں نے ہر دور کے حکمرانوں کیلئے دعائیں کی ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ بے نظیر بھٹو کی شہادت کے موقع پر میں پاکستان میں موجود نہ تھا۔ واپس آیا تو بے نظیر اور ذوالفقار علی بھٹو کی قبر پر جا کر دعا کی اور اس دعا میں پورے بھٹو خاندان کو شامل کیا، لیکن اُس وقت میڈیا اتنا سرگرم نہیں تھا خبر باہر نہیں آتی تھی، ورنہ تب بھی میری وابستگی سیاست کے ساتھ جوڑی جاتی۔ مولانا طارق جمیل صاحب کا کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان تعریف کے قابل ہیں۔ خطائیں ہر انسان سے ہوتی ہیں۔ عمران خان کی تعریف کرنے پر مجھے جمعیت کے علماء کی جانب سے بھی گالیاں دیں گئیں۔ مولانا طارق جمیل کا کہنا تھا کہ اللہ نے مجھے اتنا کچھ دے رکھا ہے کہ اگلی نسلیں بھی آرام سے کھا سکتیں ہیں، میں کسی کا چمچہ نہیں بنا۔ وزیراعظم عمران خان کیلئے دعا کی تو مجھے مسلم لیگ ن کے کارکنوں نے گالیاں دی ہیں۔ میرا کام سب کے پاس جا کر اللہ کا پیغام سنانا ہے۔ کورونا وائرس فنڈز میں زکوۃ  دینے سے متعلق کہا کہ موجودہ صورتحال میں زکوۃ دینا کا بہت بڑا اجر ملے گا۔  مولانا طارق جمیل صاحب کا کہنا تھا کہ  میرا  کسی جماعت سے کوئی تعلق نہیں ہے۔ لوگوں میں شعور ہے نہ علم ہے اور نہ ہی برداشت ہے۔ چند دن قبل ایک ساتھی نے مجھ سے فون پر بہت بدتمیزی کی، مگر میرے دل میں اس ساتھی کے لئے بھی کوئی بُرائی نہیں ہے۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.