حج ہونے یا نہ ہونے کا فیصلہ آج ہوگا۔

کورونا کی وبائی صورتِ حال میں امسال حج ہونے یا نہ ہونے کا فیصلہ آج متوقع ہے۔

ریاض ( تیز ترین ) ذرائع سعودی وزارت مذہبی امور کے مطابق خانہ کعبہ میں صفائی کا نظام مزید بہتر بنایا جا چکا ہے۔ رمضان المبارک میں نمازیوں کی کورونا وباء سے محفوظ رکنے کے لئے مسجد الحرام میں داخلے کے تمام دروازوں پر جراثیم کش سسٹم نصب کیا گیا ہے۔ سعودی عرب میں کورونا وائرس کی وجہ سے بیت اللہ شریف کے طواف کے لیے محدود افراد کو داخلے کی اجازت دی جا رہی ہے اور خانہ کعبہ کے گرد حفاظتی باڑ بھی لگائی گئی ہے۔
قبل ازیں حفاظتی اقدامات کے تحت مطاف کو ہر خاص و عام کے لئے بند کیا گیا تھا۔ کورونا کی وجہ سے رمضان المبارک کے دوران مسجد الحرام اور مسجد نبویؐ میں افطار دسترخوان پر بھی پابندی ہے۔ دسترخوان کو مستحق افراد میں راشن کے تھیلے تقسیم کیےجانے میں تبدیل کیا گیا ہے۔  وفاقی وزیر برائے مذہبی امور نور الحق قادری کا کہنا تھا کہ سعودی وزارت حج نے تاحال کسی بھی قسم کے معاہدے سے روک رکھا ہے۔ سعودی حکومت کے پاس حج ادائیگی سے متعلق مختلف تجاویز زیرِغور ہیں۔ یہ امر قابلِ ذکر ہے کہ سعودی عرب میں کورونا سے متاثر ہونے والے افراد کی تعداد 37 ہزار سے تجاوز کرچکی ہے۔ فوت ہونے والے 239 افراد میں سے 30 پاکستانی بھی شامل ہیں۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.