اسلام آباد، پولیس ناکے پر فائرنگ کے واقعہ میں دو پولیس اہلکار شہید

فائرنگ کا واقعہ گزشتہ رات 10 بجے کے قریب تھانہ ترنول سے 300 میٹر دور جی ٹی روڈ پر 26 نمبر چونگی کے قریب پولیس ناکے پر پیش آیا، کالعدم جماعت نے ذمہ داری قبول کر لی۔

اسلام آباد ( تیز ترین ) اسلام آباد میں پولیس ناکے پر فائرنگ سے دو پولیس اہلکار شہید ہوگئے۔
 فائرنگ کا واقعہ گزشتہ رات 10 بجے کے قریب تھانہ ترنول سے 300 میٹر دور جی ٹی روڈ پر واقع 26 نمبر چونگی کے قریب پولیس ناکے پر پیش آیا۔ اطلاعات کے مطابق کالعدم جماعت نے ذمہ داری قبول کرلی۔
تفصیلات کے مطابق اسلام آباد میں تھانہ ترنول کی حدود میں گزشتہ رات افسوسناک واقعہ پیش آیا ہے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق رات 10 بجے کے قریب تھانہ ترنول کی حدود میں واقعہ پولیس ناکے پر نامعلوم افراد کی فائرنگ سے دو پولیس اہلکار شہید ہو گئے۔ تھانہ ترنول سے ذرائع نے واقعے میں شہید ہونے والے اہلکاروں کے نام (اے ایس آئی) محسن ظفر اور (ہیڈ کانسٹیبل) سجاد احمد بتائے ہیں۔ پولیس ذرائع نے مزید بتایا کہ فائرنگ کے بعد اے ایس آئی محسن ظفر موقع پر ہی جاں بحق ہو گئے تھے، جبکہ ہیڈ کانسٹیبل سجاد احمد کو شدید زخمی حالت میں پمز ہسپتال منتقل کیا گیا تھا لیکن وہ بھی جاں بر نہ ہو سکے۔ فائرنگ کرنے والے حملہ آور دو موٹر سائیکلوں پر سوار تھے جن کو ناکے پر روکا گیا تو انہوں نے فائرنگ کر دی۔ 

ڈپٹی کشمنر اسلام آباد نے افسوسناک واقعے کی تصدیق اپنے ٹوئیٹر اکاؤنٹ کے ذریعے کی۔ اُن کا کہنا ہے کہ ملزمان کی پہچان کرلی گئی ہے۔
بی بی سی نیوز کے مطابق کالعدم جماعت حزب الاحرار نے اس واقعہ کی ذمہ داری قبول کی ہے۔ خبر ایجنسی کے مطابق آئی جی اسلام آباد محمد عامر ذوالفقارخان نے وقوعہ کا نوٹس لیتے ہوئے ڈی آئی جی آپریشنز وقار الدین سید کی سربراہی میں دو خصوصی تحقیاتی ٹیمیں تشکیل دے دی ہیں۔ دونوں ٹیمیں ایس پی انوسٹی گیشن سید مصطفی تنویر اور ایس پی صدر کی سربراہی میں تفتیش کریں گی۔ آئی جی اسلام آباد نے واقعہ میں ملوث ملزمان کی جلد گرفتاری کا حکم بھی دیا ہے۔ فائرنگ کے واقعہ کے بعد پولیس نے پورے علاقہ کو گھیرے میں لے کرسرچ آپریشن شروع کردیا ہے۔ وقوعہ کے بعد ڈی آئی جی آپریشنز سمیت سینئر پولیس افسران موقع پر موجود رہے۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.