وفاقی کابینہ نے سٹیل ملز ملازمین کو فارغ کرنے کے فیصلے کی توثیق کردی

کابینہ نے اقتصادی رابطہ کمیٹی کے فیصلے کی توثیق کرتے ہوئے پاکستان اسٹیل ملز کے تمام ملازمین کو برطرف کرنے کی منظوری دے دی ہے۔

اسلام آباد ( تیز ترین ) وفاقی کابینہ نے سٹیل ملز ملازمین کو فارغ کرنے کے فیصلے کی توثیق کردی ہے۔ وفاقی کابینہ نے اقتصادی رابطہ کمیٹی کے فیصلے کی توثیق کرتے ہوئے پاکستان اسٹیل ملز کے تمام ملازمین کو برطرف کرنے کی منظوری دے دی ہے۔
تفصیلات کے مطابق  وزیراعظم عمران خان کی زیرِ صدارت سٹیل ملز کی نجکاری اور ملازمین کی برطرفی کے معاملے پر اجلاس ہوا۔ اسٹیل ملز کی نجکاری کے معاملے پر کابینہ اجلاس میں گرما گرمی کا ماحول رہا، اجلاس کے دوران مشیرِ خزانہ حفیظ شیخ نجکاری کے معاملے پر اسد عمر پر برس پڑے۔ حفیظ شیخ کا کہنا تھا کہ نجکاری میں دلچسپی لینے والی کمپنیوں سے متعلق غلط بریفنگ دی گئی ہے۔ سرکاری دستاویزات میں ان کمپنیوں کی جانب سے یقین دہانی کا ذکر نہیں ہے۔ حفیظ شیخ کا مزید کہنا تھا کہ جب نجکاری کا عمل شروع ہوگا تو بہت سے حقائق سامنے آئیں گے۔ ذرائع کے مطابق جب حفیظ شیخ نے اسد عمر سے متعلق ریمارکس دئے تو وزیراعظم عمران خان خاموشی سے سنتے رہے اور کوئی ردِعمل نہیں دیا۔ اب خبر سامنے آئی ہے کہ وفاقی کابینہ نے اقتصادی رابطہ کمیٹی (ای سی سی) کے فیصلے کی توثیق کرتے ہوئے پاکستان اسٹیل ملز کے تمام ملازمین کو برطرف کرنے کی منظوری دے دی ہے۔ وزیر اعظم ہاؤس سے جاری بیان کے مطابق کابینہ نے اقتصادی رابطہ کمیٹی کے 3 جون 2020 کے اجلاس میں کئے گئے فیصلوں کی توثیق کی ہے۔ وفاقی کابینہ نے اسٹیل ملز کے حوالے سے اقتصادی رابطہ کمیٹی کے فیصلے پر تفصیلی غورکیا اور نوٹ کیا کہ موجودہ حکومت کا ایجنڈا اصلاحات کا ہے۔ پاکستان اسٹیل ملز کے حوالے سے کابینہ نے کہا کہ سالہا سال سے غیر فعال ادارے کا سارا بوجھ عوام کو برداشت کرنا پڑتا ہے، لہٰذا ضرورت اس امر کی ہے کہ ملکی مفاد میں اصلاحاتی ایجنڈے کو مزید آگے بڑھا یا جائے۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.