روس کی کورونا ویکسین مسلسل کامیاب-

ویکسین کے دیے جانے کے دو ہفتے بعد بھی ان رضاکاروں میں کوئی سائیڈ افیکٹ نہیں ظاہر ہوئے۔

ماسکو ( تیز ترین ) روس کی جانب سے کرونا وائرس کی ویکسین کو رضاکاروں کے ایک گروپ کو دیے جانے کے دو ہفتے بعد بھی اس کے کوئی منفی اثرات مرتب نہیں ہوئے، جس سے امید پیدا ہوگئی ہے کہ بڑے پیمانے پر ویکسین کی تیاری کے بعد یہ دوا جلد مارکیٹ میں آجائے گی۔ اس ضمن میں روسی وزارت دفاع کی ایک پریس ریلیز میں بتایا گیا ہے کہ پہلے گروپ کے رضاکار بہتر محسوس کررہے ہیں اور ان کی صحت سے متعلق کوئی شکایت نہیں ہے۔ اس ویکسین کے دیے جانے کے دو ہفتے بعد بھی ان رضاکاروں میں کوئی سائیڈ افیکٹ نہیں ظاہر ہوئے۔
یہ امر قابلِ ذکر ہے کہ روس کی کرونا وائرس کی ویکسین کے تجربات ماسکو میں واقع ملک کی وزارت دفاع اور جمالی انسٹی ٹیوٹ آف ایپیڈیمولوجی اینڈ مائکروبیالوجی کی جانب سے مشترکہ طور پر کئے جا رہے ہیں۔ یہ تجربات گزشتہ ماہ جون کے شروع میں روسی فوجی جوانوں اورعام شہریوں کے رضاکاروں کے ایک گروپ پر کیے گئے تھے۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.