پب جی گیم کی منظوری کی بندش کے حوالے سے وزرات انفارمیشن ٹیکنالوجی کا کوئی کردار نہیں ہے۔ سید امین الحق

معاملہ عدالت میں زیرِ سماعت ہے۔ پب جی گیم کھلنے یا بند رہنے سے متعلق عدالتی فیصلے کا انتظار کرنا چاہئے۔ وفاقی وزیر انفارمیشن ٹیکنالوجی

اسلام آباد ( تیز ترین ) وفاقی وزیر انفارمیشن ٹیکنالوجی سید امین الحق نے ایک بیان میں کہا ہے کہ پب جی گیم کی منظوری کی بندش کے حوالے سے وزرات انفارمیشن ٹیکنالوجی کا کوئی کردار نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ پی ٹی اے وزرات انفارمیشن ٹیکنالوجی کے ماتحت نہیں ہے۔ اس میں شک نہیں ہے کہ گیم کی بندش سے نوجوان ایک تفریح اور آمدنی کے ذریعے سے محروم ہوئے۔ سیدامین الحق نے کہا کہ معاملہ عدالت میں ہے۔ گیم کھلنے یا بند رہنے سے متعلق عدالتی فیصلے کا انتظار کرنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ عدالت جو فیصلہ کرے ایک اچھے قانون پسند شہری کی طرح اسے خوش دلی سے تسلیم کریں ۔ ان کا کہنا تھا کہ نوجوان اور ان کے والدین یہ ضروردیکھیں کسی گیم سے کوئی منفی رجحانات تو جنم نہیں لے رہے۔ انہوں نے بتایا کہ جو نوجوان اس گیم میں آگے ہیں امید ہے وہ تعلیمی میدان میں بھی آگے ہوں گے، نوجوان صرف کھیل ہی نہیں تعلیم کے میدان میں بھی اپنے جوہر دکھائیں، اٴْمید ہے نوجوان اپنی تعلیم اور ٹکڑا صحت مند سرگرمیوں پر بھرپور توجہ مرکوز رکھیں گے۔ وزرات انفارمیشن ٹیکنالوجی نوجوانوں کی صحت مند سرگرمیوں کیلئے ہمیشہ سہولت کار رہے گی۔ وفاقی وزیر کا مزید کہنا تھا کہ انفارمیشن ٹیکنالوجی کی وسیع فیلڈ میں نوجوانوں کو اپنی صلاحتیں دکھانے کے بھرپور مواقع موجود ہیں۔ نوجوانوں کو چاہئے کہ اپنی تخلیقی صلاحیتوں کا استعمال کرتے ہوئے آئی ٹی کے شعبے میں پاکستان کا نام روشن کریں۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.