سی ڈی اے نے ہاؤسنگ سوسائٹی بناتے ہوئے علیم خان کی طرف سے سرکاری اراضی پر تجاوزات قائم کرنے کی تصدیق

سینئر وزیر نے اپنی ہاؤسنگ سوسائٹی “پارک ویو” کو کُری روڈ سے منسلک کرنے کے لیے سرکاری اراضی پر ناجائز تجاوزات قائم کیں، سی ڈی اے رپورٹ

لاہور ( تیز ترین ) علیم خان نے ہاؤسنگ سوسائٹی بناتے ہوئے سرکاری اراضی پر تجاوزات قائم کیں، سی ڈی اے نے اپنی رپورٹ میں تصدیق کی ہے کہ سینئر وزیر نے اپنی ہاؤسنگ سوسائٹی “پارک ویو” کو کری روڈ سے منسلک کرنے کے لیے سرکاری اراضی پر ناجائز تجاوزات قائم کیں۔
 اسلام آباد ہائی کورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ کی ہدایت کے جواب میں سی ڈی اے نے علیم خان کے خلاف تجاوزات قائم کرنے کے الزام میں ایف آئی آر کے اندراج کی درخواست کی سماعت کے بعد یہ رپورٹ پیش کی ہے۔ ہاؤسنگ ڈیولپر نے دعوٰی کیا تھا کہ انہوں نے اس زمین کے لیے ایک سڑک تعمیر کی تھی جو اس مقصد کے لیے مختص کی گئی تھی، تاہم سی ڈی اے کی رپورٹ میں کہا گیا کہ نہ صرف اس سڑک کے لئے زمین مختص کی گئی تھی، بلکہ سی ڈی اے کے چیئرمین کے طور پر کام کرنے والے دو سینئر بیوروکریٹس کی طرف بھی انگلی اٹھائی گئی تھی۔ رپورٹ میں کہا گیا کہ ڈیولپر سی ڈی اے زمین اور پروجیکٹ کی اراضی کے درمیان خلاء کے مالک نہیں تھے۔ ہاؤسنگ سوسائٹی کے اس دعوے کے بارے میں کہ اس سڑک کو سی ڈی اے نے اپنے تصوراتی منصوبے میں پہلے ہی تجویز کیا تھا۔ سی ڈی اے نے کہا کہ یہ صرف کری کے لئے تصوراتی منصوبہ تھا نہ کہ منظور شدہ لے آؤٹ تھا۔ سی ڈی اے نے علیم خان کو مئی 2018 میں سڑک تعمیر کرنے کی اجازت دینے کی اپنی غلطی کا اعتراف کیا۔ رپورٹ میں کہا گیا کہ 9 مئی 2018 کے سی ڈی اے بورڈ کے اس فیصلے نے ڈیولپر کو اجازت نامے  کی شرائط کی ضروریات کو پورا کرنے کی اجازت دی۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.