کملی والےﷺ کے گستاخوں کی چیخیں، فرانسیسی صدر ایمانویل میکرون نے منتیں شروع کر دیں

فرانس نے خلیجی ممالک سے اپنی مصنوعات کا بائیکاٹ ختم کرنے کا مطالبہ کر دیا۔

پیرس ( تیز ترین ) حضور اکرمﷺ کی شان میں گستاخانہ خاکوں کے بارے میں فرانس کے صدر کی جانب سے نامناسب، اوراسلام مخالف روئے کے بعد مشرک وسطیٰ کے کئی ممالک میں فرنچ مصنوعات کی بائیکاٹ کی مہم زور و شور سے چل رہی ہے جس کے بعد فرانسیسی صدر ایمانوئل میکرون نے منتیں کرنی شروع کر دیں۔
فرانس نے خلیجی ممالک سے بائیکاٹ ختم کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔
تفصیلات کے مطابق فرانس میں گستاخانہ خاکوں کی اشاعت اور فرانسیسی حکومت کے اسلام مخالف رویئے پر مشرق وسطی کے کئی ممالک میں فرانسیسی مصنوعات کی بائیکاٹ کی مہم زور و شور سےچلائی جارہی ہے۔سوشل میڈیا پر بائیکاٹ فرنچ پروڈکٹس اوربائیکاٹ فرانس کے ہیش ٹیگ ٹرینڈ کر رہے ہیں۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق سوشل میڈیا پر فرانسیسی اشیا کے بائیکاٹ کی مہم کے بعد کویت کی مارکیٹوں سے فرانسیسی مصنوعات ہٹا لی گئیں۔ خلیج تعاون کونسل (جی سی سی) اور یونیسکو فرانس میں کویتی مشن نے فرانسیسی صدر ایمانوئل میکرون کے اسلام سے متعلق بیان کی شدید الفاظ میں مذمت کی اور ان کے ریمارکس کو غیر ذمہ دارانہ قرار دے کر مسترد کردیا ہے۔ فرانس کے صدر میکروں کے اسلام مخالف بیانات پر ترک صدر طیب اردوان برہم ہوگئے اور انہوں نے فرانسیسی صدر میکروں کو دماغی معائنے کا مشورہ دے دیا۔ تاہم اب فرانس کے صدر نے بھی گھٹنے ٹیک دئیے ہیں اور باقائدہ منتیں شروع کر دیں۔
اطلاعات کے مطابق مسلمانوں سے امتیازی سلوک پر ترک صدر سمیت مسلم ممالک کے سربراہان کی فرانسیسی ہم منصب پر تنقید کام کر گئی۔ ایمانوئل میکرون نے عرب ممالک سے اپنی اشیاء کا بائیکاٹ نہ کرنے کی اپیل کی ہے۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.