بلوچستان کو 70 سال سے محروم اور پسماندہ رکھا گیا ماضی میں بلوچستان کی لیڈرشپ کے ساتھ سنگین ناروا سلوک رکھا گیا۔ ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری

موجودہ حکومت بلوچستان کے عوام کو قومی دھارے میں لانے اور سی پیک کی تکمیل کے لئے سرگرم ہے۔ بلوچستان میں قریباََ 100 منصوبوں پر کام شروع کر رہے ہیں۔ ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی

اسلام آباد( تیز ترین ) ستر سالوں سے بلوچستان کو محروم اور پسماندہ رکھا گیا، پرویز مشرف کی اکبر بگٹی کو شہید کرنے کی غلطی سے بلوچستان نے بڑا خمیازہ بھگتا۔ بلوچستان میں بہت سے کام کرنے باقی ہیں۔ ہم بلوچستان میں قریباََ 100 منصوبوں پر کام شروع کر رہے ہیں۔ بلوچستان رورل سپورٹ پروگرام بلوچستان میں بہترین کام کر رہا ہے۔
ان خیالات کا اظہار ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری نے اسلام آباد میں “ہمارا بلوچستان” تقریب کے شرکا سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ تقریب کا انعقاد بلوچستان رورل سپورٹ پروگرام (بی آر ایس پی) نے کیا تھا۔ تقریب میں سینیئر صحافیوں نے بھی بلوچستان کی ترقی اور خوشحالی کے لئے اظہار خیال کیا۔ تقریب میں ڈاکٹر ثنا اچکزئی، ظاہر ناصر اور دیگر مہمان بھی شریک ہوئے۔ تقریب کے شرکا سے خطاب کرتے ہوئے ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری کا کہنا تھا کہ بلوچستان کو 70 سال سے محروم رکھا گیا۔ ماضی میں بلوچستان کی لیڈرشپ کے ساتھ سنگین ناروا سلوک رکھا گیا۔ موجودہ حکومت بلوچستان کے عوام کو قومی دھارے میں لانے اور سی پیک کی تکمیل کے لئے سرگرم ہے۔ سی پیک کے مغربی روٹ کے لئے ہم نے بڑی کاوشیں کیں، ہماری حکومت جب آئی تو ہم نے باقاعدہ سی پیک پر کام شروع کیا۔ قاسم خان سوری نے کہا کہ جیسے پورے ملک میں مسائل ہیں اسی طرح بلوچستان میں بھی ہیں۔ بلوچستان پاکستان کا 44 فیصد رقبہ ہے۔ بلوچستان کو ماضی میں خاص توجہ نہیں دی گئی۔ بلوچستان ماضی میں محرومیوں کا شکار رہا۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.