سینیٹ الیکشن میں فوج اور ایجنسیوں کا کوئی کردار نہیں تھا۔ وزیر داخلہ

حفیظ شیخ سندھ سے الیکشن لڑنا چاہتے تھے، وہ سمجھتے تھے کہ میں سندھ سے ہوں لیکن عمرا ن خان نے کہا کہ آپ اسلام آباد سے الیکشن لڑیں۔ شیخ رشید احمد کی گفتگو

اسلام آباد ( تیز ترین ) وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید کا کہنا ہے کہ فوج اور ایجنسیوں کا سینیٹ الیکشن میں کوئی کردار نہیں تھا۔ اگر کردار ادا کرتے تو حفیظ شیخ جیت جاتا۔ فوج 110فیصد منتخب حکومت کے ساتھ کھڑی ہے۔ انہوں نے نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ حفیظ شیخ سندھ سے الیکشن لڑنا چاہتے تھے، وہ سمجھتے تھے کہ میں سندھ سے ہوں لیکن عمران خان نے کہا کہ آپ اسلام آباد سے الیکشن لڑیں۔
اسد عمر کو نکالنے میں فوج کا کوئی ہاتھ نہیں تھا۔ اگر ایسا ہوتا تو میں اسد عمر کا کیس نہ لڑتا۔ عمران خان نے اسد عمر کو نکالنے میں جلد بازی کی۔ پاکستان کو چلانے کے لئے آئی ایم ایف کے پاس جانا ضروری تھا بلکہ پہلے چلے جانا چاہیے تھا۔ باجوہ صاحب نے مجھے کہا کہ ہم منتخب حکومت کے ساتھ کھڑے ہیں۔ اپوزیشن کے رہنماؤں کے سامنے باجوہ صاحب نے کہا کہ کل کو آپ میں سے کوئی منتخب ہوکر آئے گا تو فوج آپ کے ساتھ کھڑی ہوگی لیکن سینیٹ کے ووٹوں میں کوئی کام نہیں کیا۔ اگر کرتے تو حفیظ شیخ جیت جاتا۔
انہوں نے واضح کیا کہ اس خطے میں اگر یہ فوج نہ ہو تو یہاں بھی عراق، لیبیا، مصر جیسے حالات ہوں۔ اپوزیشن روزانہ ان کا نام لے کر باتیں کررہی ہے لیکن ان کا صبر دیکھیں۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں الیکشن کمیشن پر زیادہ نزلہ نہیں گرانا چاہیے۔ راجہ سلطان نے بھی سخت بیان دیا، ہمارا بھی لہجہ سخت تھا، دونوں کو ٹھنڈا ہوناچاہیے۔ انہوں نے کہا کہ مریم اورنگزیب کے ساتھ جو واقعہ پیش آیا، نہیں ہونا چاہیے تھا ، میں اس کی مذمت کرتا ہوں اگر کوئی درخواست دے گا تو میں ایکشن لوں گا۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.